اپ ڈیٹ: 10 July 2019 - 08:54
اسلامی جمہوریہ ایران کی پارلیمنٹ کے اسپیکر نے علاقائی مسائل پر سعودی حکام کے حالیہ اقدامات پر افسوس کا اظہار کیا ہے۔
خبر کا کوڈ: ۱۰۸۷
تاریخ اشاعت: 23:49 - April 08, 2018

علاقائی مسائل پر سعودی حکام کے اقدامات افسوسناکمقدس دفاع نیوز ایجنسی کی رپورٹ کے مطابق، اسلامی جمہوریہ ایران کی پارلیمنٹ کے اسپیکرعلی لاریجانی نے آج صبح پارلیمنٹ کے عام اجلاس سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ  سعودی حکام ببانگ دھل اعلان کرتے ہیں کہ امریکہ کے کہنے اور حمایت کی وجہ سے تکفیری دہشتگردوں کو منظم اور مسلح کیا اور ہزاروں افراد کو خاک و خون میں نہلا دیا تمام علاقائی اورعالمی ملکوں کیلۓ خطرے کی گھنٹی ہے کہ سعودی حکام نےانسان دوستانہ اور دینی بیانات کے لبادے میں گزشتہ برسوں میں کس قسم کے مکروہ اقدامات انجام دیئے ہیں۔

ایرانی پارلیمنٹ کے اسپیکر نے اس جانب اشارہ کرتے ہوئے کہ سعودی حکام نے سعودی عرب کے مسلمان عوام کے ذخائر امریکہ کے دلال صفت حکمرانوں کو دیئے ہیں کہا کہ امریکی حکام اس کی قدردانی کرنے کے بجائے کہتے ہیں کہ اگر امریکہ خلیج فارس کے ملکوں کی حمایت نہ کرے تو دو ہفتوں میں ان کی حکومتیں ختم ہو جائیں گی۔

علی لاریجانی نے بحرین میں برطانیہ کے فوجی اڈے کے افتتاح کی جانب اشارہ کرتے ہوئے کہا کہ برطانوی حکومت نے بحرین کے عوام کی رائے کے برخلاف اس ملک کے مظلوم عوام کی دولت سے فوجی اڈہ قائم کیا۔

ایرانی پارلیمنٹ کے اسپیکر نے فلسطین میں رونما ہونے والے حالیہ واقعات پر کہا کہ امریکہ اور سعودی عرب جیسے بعض عرب ممالک کی جانب سے فلسطین کے مظلوم عوام کیلئے عرصہ حیات تنگ کرنے کی کوششوں سے یہ ممالک اس خیال میں ہیں کہ اس طرح فلسطینی عوام کو غرب اردن اور غزہ کی پٹی میں محصور کر کے ان کی تحریک کو ختم کر دیں گے۔

علی لاریجانی کا کہنا تھا کہ قدس کی غاصب اور جابر صیہونی حکومت کو سرکاری طور پر تسلیم کرنے کے اعلان سے یوں دکھائی دیتا ہے کہ سعودی حکام اس منحوس پروجیکٹ کا عہدہ اپنے ہاتھ میں لینے کیلئےاپنے مال و دولت کو امریکہ پر لٹانے کی کوشش کر رہے ہیں۔

پیغام کا اختتام/ 

آپ کا تبصرہ
نام:
ایمیل:
* رایے:
مقبول خبریں