اپ ڈیٹ: 10 July 2019 - 08:54
نیوزی لینڈ کے شہر کرائسٹ چرچ کی دو مساجد میں دہشت گردی کے واقعے میں 50 افراد کی شہادت پر پورے پاکستان میں یوم سوگ منایا جارہا ہے اور سرکاری عمارتوں پر قومی پرچم سرنگوں ہے۔
خبر کا کوڈ: ۳۷۶۳
تاریخ اشاعت: 14:41 - March 18, 2019

سانحہ کرائسٹ چرچ: پاکستان میں یوم سوگ، قومی پرچم سرنگوںمقدس دفاع نیوز ایجنسی کی رپورٹ کے مطابق، پریس کانفرنس کے دوران وزیر خارجہ شاہ محمود قریشی کا کہنا تھا کہ سانحہ کرائسٹ چرچ پر پوری قوم سوگ میں ہے اور ملک بھر میں سرکاری اور نیم سرکاری عمارتوں پر قومی پرچم سرنگوں رہے گا۔

یاد رہے کہ 15 مارچ کو نیوزی لینڈ کے شہر کرائسٹ چرچ کی دو مساجد میں دہشت گردوں نے فائرنگ کر کے 9 پاکستانیوں سمیت 50 افراد کو شہید اور درجنوں کو زخمی کردیا تھا۔

وزیر خارجہ شاہ محمود قریشی کے مطابق تمام متاثرہ خاندانوں سے رابطہ ہوگیا ہے، ایک پاکستانی شدید زخمی ہے جس کی حالت نازک ہے، ہمارے ڈپٹی ہائی کمشنر ان کی فیملی سے رابطے میں ہیں۔

انہوں نے کہا کہ تین خاندانوں نے میتیں پاکستان لانے کی درخواست کی ہے جب کہ 6 پاکستانی شہدا کے اہل خانہ اپنے پیاروں کی تدفین نیوزی لینڈ میں ہی کرنا چاہتے ہیں۔

ان کا کہنا تھا کہ اہلخانہ میتوں سے متعلق جو فیصلہ کریں گے اس کا احترام کریں گے، 6 میتوں کے کفن دفن کا انتظام کرائسٹ چرچ میں ہی ہو گا، 3 میتیں پاکستان لائی جائیں گی، اگر اہلخانہ نے فیصلے پر نظرثانی کی تو ہم تعاون کریں گے۔

وزیر خارجہ نے بتایا کہ ان کے کیوی ہم منصب نے بتایا کے 4 افراد زیرحراست ہیں، لیکن نیوزی لینڈ کے حکام کی جانب سے ایک ہی شخص کا شبہ ظاہر کیا جا رہا ہے۔

انہوں نے مزید بتایا کہ کرائسٹ چرچ میں مساجد پر حملہ کرنے والا دہشتگرد حال ہی میں نیوزی لینڈ واپس آیا تھا، دہشتگردی کے اس واقعے سے پہلے اس نے ای میل بھی کی۔

ان کا کہنا تھا کہ نیوزی لینڈ کے وزیرخارجہ نے بتایا کے میتوں کی شناخت کا عمل بہت مشکل تھا، کل سےمیتوں کی حوالگی کا سلسلہ شروع ہو جائے گا۔

شاہ محمود قریشی نے کہا کہ کیوی حکام سے تمام تر تحقیقات سےآگاہ رکھنے کا کہا ہے۔

پیغام کا اختتام/

آپ کا تبصرہ
نام:
ایمیل:
* رایے: