اپ ڈیٹ: 19 September 2018 - 14:44
پاکستانی نژاد برطانوی وزیر ساجد جاوید کو دھمکی آمیز خط موصول ہوا ہے۔۔
خبر کا کوڈ: ۸۲۷
تاریخ اشاعت: 23:57 - March 18, 2018

برطانیہ میں مسلمانوں کے خلاف دھمکیوں میں اضافہمقدس دفاع نیوز ایجنسی کی بین الاقوامی رپورٹر رپورٹ کے مطابق ساجد جاوید نے اپنے ٹوئٹر پیج پر اس خط کی تصویر جاری کی ہے جس میں ایک نامعلوم گروپ نے تین اپریل کو مسلمانوں کی سزا کادن قرار دیا ہے۔

خط لکھنے والے نے اپنے مخاطبین کو مسلمانوں کے خلاف تشدد پر اکسایا ہے اور ہر اقدام کے عوض نمبر دینے کا اعلان کیا ہے۔ان اقدامات میں مسلمانوں کوگالیاں دینا، مسلم خواتین کے سروں سے اسکارف کھینچنا، ایسڈ پھینکنا، چاقو زنی، مساجد میں بم دھماکے کرنا، وغیرہ شامل ہیں اور ہر اقدام کے عوض دس سے سو نمبر مقرر کیے گئے ہیں۔

کہا جارہا ہے کہ برطانیہ کے مسلمان وزیر کو موصول ہونے والے خط کے ساتھ ایک چپکنے والے مادے کے علاوہ برطانیہ کے دیگر شہروں کے مسلمانوں کے لیے بھی دھمکی آمیز خط ارسال کیا گیا ہے۔اس سے پہلے بھی برطانیہ کے چار مسلمان ارکین پارلیمنٹ کو ایسے ہی دھمکی آمیز خط موصول ہوچکے ہیں۔

مانچسٹر کی مسجد کو بھی گزشتہ دنوں ایسا دھمکی آمیز خط موصول ہوا تھا جس کے بعد انتہا پسند گروہ نے مسجد پر حملہ بھی کیا تھا۔کہا جارہا ہے کہ برطانیہ میں سن دوہزار سترہ کے دوران نسلی اور مذہبی بنیادوں پر انجام پانے والے جرائم میں قابل ذکر حدتک اضافہ ہوا ہے۔

پیغام کا اختتام/ 

 
 
آپ کا تبصرہ
نام:
ایمیل:
* رایے:
مقبول خبریں