اپ ڈیٹ: 11 November 2019 - 13:28
اسلامی جمہوریہ ایران کے ایٹمی توانائی کے ادارے کے سربراہ نے امریکی پابندیوں کا مقابلہ کرنے کیلئے ایران کی توانائیوں پر تاکید کرتے ہوئے کہا کہ ایران جوہری معاہدے سے قبل کی پوزیشن پر جانے کی ٹیکنالوجی کی توانائی و طاقت رکھتا ہے۔
خبر کا کوڈ: ۳۶۹۸
تاریخ اشاعت: 23:40 - February 22, 2019

ایران جوہری معاہدے سے قبل کی پوزیشن پر جانے کی ٹیکنالوجی و توانائی رکھتا ہےمقدس دفاع نیوز ایجنسی کی رپورٹ کے مطابق، اسلامی جمہوریہ ایران  کے ایٹمی توانائی کے ادارے کے سربراہ ڈاکٹر علی اکبر صالحی نے کل الجزیرہ سے گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ ایران نے بہت سے شعبوں میں خودکفائی کے ذریعے دشمن کی پابندیوں کا مقابلہ کیا اور مستقبل میں بھی دشمن کے دباو میں نہیں آئے گا ۔

ڈاکٹر علی اکبر صالحی نے جوہری معاہدے کے حوالے سے یورپی ممالک سے کہا کہ وہ اپنے وعدوں پر قائم رہیں تاہم ان کا کہنا تھا کہ یورپ نے اس حوالے سے پہلا قدم اٹھایا ہے اور ہمیں توقع ہے کہ وہ اس سے زیادہ اقدامات کریں گے۔

ایران  کے ایٹمی توانائی کے ادارے کے سربراہ نے ایران کے بیلسٹیک میزائل کے بارے میں کہا کہ اس موضوع پر کسی بھی قسم کی کوئی گفتگو نہیں ہو گی۔

ڈاکٹر علی اکبر صالحی نے  وارسا اجلاس میں امریکی حکام اور صیہونی وزیر اعظم کی شکست کی جانب اشارہ کرتے ہوئے کہا کہ وارسا اجلاس سے ان کے ہاتھ کچھ بھی نہیں آیا اور اس طرح انھیں سخت خفت کا سامنا کرنا پڑا ۔

پیغام کا اختتام/

 
 
آپ کا تبصرہ
نام:
ایمیل:
* رایے: