اپ ڈیٹ: 07 May 2021 - 15:40
پاکستان کے صوبہ بلوچستان کے علاقے مستونگ میں ایک انتخابی مہم کے دوران دھماکے سے بلوچستان عوامی پارٹی کے امیدوار سراج رئیسانی سمیت بیس افراد ہلاک اور تیس دیگر زخمی ہوگئے ہیں۔
خبر کا کوڈ: ۱۸۳۵
تاریخ اشاعت: 18:04 - July 13, 2018

مستونگ میں انتخابی امیدوار کے قافلے کے راستے میں دھماکہ درجنوں ہلاک و زحمیمقدس دفاع نیوز ایجنسی کی بین الاقوامی رپورٹر رپورٹ کے مطابق، مستونگ میں لویز ذرائع نے بتایا ہے کہ بلوچستان عوامی پارٹی کے صوبائی اسمبلی کے امیدوار نواب زادہ سراج رئیسانی کی انتخابی مہم کے دوران بم کا دھماکہ ہوا جس میں سراج رئیسانی سمیت بیس افراد ہلاک  اور تیس دیگر زخمی ہوگئے۔

ڈپٹی کمشنر مستونگ نے ہلاکتوں کی تصدیق کردی ہے اور کہا ہے کہ ہلاکتوں کی تعداد میں اضافہ ہوسکتا ہے۔ زخمیوں میں سراج رئیسانی بھی شامل تھے جو بعد میں زخموں کی تاب نہ لاکر چل بسے۔

دھماکہ اس وقت ہوا جب سراج رئیسانی کا قافلہ انتخابی مہم کے دوران مستونگ کے علاقے درین گڑھ سے گذر رہا تھا۔ عینی شاہدین کا کہنا ہے کہ دھماکے کی شدت بہت زیادہ تھی جس سے پورا علاقہ لرز اٹھا۔ سراج ر‏ئیسانی سابق وزیراعلی بلوچستان اسلم رئیسانی کے چھوٹے بھائی تھے۔

قبل ازیں پاکستان کے شہر بنوں میں سابق وزیراعلی خیبرپختونخوا کرم درانی کے قافلے کے قریب ہونے والے بم دھماکے میں چار افراد ہلاک اور انتالیس دیگر زخمی ہوگئے تاہم خود اکرم درانی بال بال بچ گئے۔ جبکہ چار روز قبل پشاور میں بھی اے این پی کے رہنما ہارون بلور کی کارنرمیٹنگ پر خودکش دہشت گردانہ حملے میں خود ہارون بلور سمیت بیس افراد ہلاک ہوگئے تھے۔

پیغام کا اختتام/

آپ کا تبصرہ
نام:
ایمیل:
* رایے:
مقبول خبریں