اپ ڈیٹ: 11 November 2019 - 13:28
ایمنسٹی انٹرنیشنل نے کہا ہے کہ بحرین کی اپوزیشن جماعت الوفاق کے سربراہ شیخ علی سلمان کے خلاف آل خلیفہ حکومت کی عدالت کا فیصلہ ظالمانہ ہے۔
خبر کا کوڈ: ۳۵۳۸
تاریخ اشاعت: 18:26 - January 29, 2019

شیخ علی سلمان کے خلاف فیصلہ ظالمانہ ہے، ایمنسٹی انٹرنیشنلمقدس دفاع نیوز ایجنسی کی رپورٹ کے مطابق، ایمنسٹی انٹرنیشنل میں مشرق وسطی کے شعبے کی ڈائریکٹر سماح حدید نے بحرین کی الوفاق پارٹی کے سربراہ شیخ علی سلمان کے خلاف اپیل کورٹ کے فیصلے پر تنقید کرتے ہوئے کہا کہ یہ مقدمہ اور اس کا فیصلہ، ظالمانہ ہے-

ایمنسٹی انٹرنیشنل نے بحرینی حکام سے کہا ہے کہ وہ شیخ علی سلمان کو غیر مشروط فوری طور پر رہا کریں- انسانی حقوق کی مذکورہ عالمی تنظیم نے کہا ہے کہ اس طرح کے عدالتی فیصلے سے یہ ثابت ہو جاتا ہے کہ بحرینی حکام، ہر اس آواز کو دبا دینے کی کوشش کر رہے ہیں جو حکومتی پالیسیوں کے خلاف ہوتی ہے-

ایمنسٹی انٹرنیشنل نے کہا کہ شیخ علی سلمان کے خلاف یہ فیصلہ بحرین میں آزادی بیان کے حق کے تابوت میں ایک اور کیل ثابت ہو گا-

واضح رہے کہ بحرین کی آل خلیفہ حکومت کی نمائشی عدالت نے پیر کو شیخ علی سلمان اور ان کے دو ساتھیوں کے خلاف نچلی عدالت کے ذریعے سنائی گئی عمر قید کی سزا کی توثیق کردی ہے-

شیخ علی سلمان اور ان کے دو ساتھیوں، شیخ حسن سلطان اور علی الاسود پر بحرینی حکومت نے الزام عائد کیا ہے کہ انہوں نے قطر کے لئے جاسوسی کی ہے-

عدالتی فیصلے کے خلاف اپنا ردعمل ظاہر کرتے ہوئے الوفاق پارٹی نے کہا ہے کہ یہ فیصلہ ظالمانہ ہے اور آل خلیفہ حکومت کے مظالم کے خلاف بحرینی عوام کی جد وجہد اور پرامن تحریک جاری رہے گی-

پیغام کا اختتام/

 
 
آپ کا تبصرہ
نام:
ایمیل:
* رایے: