اپ ڈیٹ: 09 May 2021 - 17:56
سعودی عرب سے نکالے جانے والے سیکڑوں پاکستانی محنت کشوں نے اسلام آباد میں سعودی حکومت کے خلاف مظاہرہ اور اپنی بقایا تنخواہوں کی ادا‏ئگی کا مطالبہ کیا۔
خبر کا کوڈ: ۶۳۸
تاریخ اشاعت: 23:48 - March 05, 2018

سعودی عرب سے نکالے جانے والے پاکستانیوں کا مظاہرہمقدس دفاع نیوز ایجنسی کی بین الاقوامی رپورٹر رپورٹ کے مطابق سعودی عرب کی اوجیہ کمپنی سے باہر نکالے جانے والے پاکستان کے ان محنت کشوں نے اسلام آباد میں احتجاج کرتے ہوئے آل سعود کی خاندانی حکومت کے خلاف نعرے لگائے اور اس کمپنی سے مطالبہ کیاکہ وہ ان کی بقایا تنخواہیں ادا کرے۔

سعودی عرب کی یہ کمپنی لبنان کے وزیر اعظم سعد حریر سے متعلق ہے۔ پاکستانی محنت کشوں نے اعلان کیا ہے کہ جب تک ان کے مطالبات پورے نہیں کئے جائیں گے ان کا احتجاج جاری رہے گا۔

پاکستانی مظاہرین کا کہنا ہے کہ ریاض میں پاکستان کا سفارت خانہ سعودی عرب سے ان کے نکالے جانے اور ان کی تنخواہیں نہ دئے جانے کا باعث بنا ہے  سعودی کمپنی اوجیہ  سے نکالے جانے والے پاکستانیوں کی تعداد دس ہزار سے زائد ہے۔

پیغام کا اختتام/

آپ کا تبصرہ
نام:
ایمیل:
* رایے:
مقبول خبریں