اپ ڈیٹ: 11 November 2019 - 13:28
ہندوستان کے زیر انتظام کشمیر کل جماعتی حریت کانفرنس (م) کے چیئرمین میرواعظ عمر فاروق نے لائن آف کنٹرول کے دونوں جانب گولہ باری سے ہلاکتوں اور تباہ کاری پر تشویش کا اظہار کیا ہے۔
خبر کا کوڈ: ۸۷۱
تاریخ اشاعت: 18:23 - March 22, 2018

پاکستان اور ہندوستان سے صبر و تحمل سے کام لینے کی اپیلمقدس دفاع نیوز ایجنسی کی بین الاقوامی رپورٹر رپورٹ کے مطابق سرینگر میں میرواعظ عمر فاروق کی صدارت میں پارٹی کے ایگزیکیٹو کونسل، جنرل کونسل اور ورکنگ کمیٹی کا اجلاس منعقد ہوا، جس میں ہندوستان اور پاکستان کے درمیان کشمیر میں جاری سرحدی کشیدگی، سرحد کے دونوں طرف قیمتی انسانی جانوں کے ضیاع پر شدید تشویش کا اظہار کرتے ہوئے دونوں ممالک کی سیاسی قیادت پر زور دیا گیا کہ وہ مسئلہ کشمیر سمیت جملہ حل طلب مسائل کے حل کے لئے گفت و شنید کا راستہ اختیار کریں۔

اجلاس میں کہا گیا کہ دونوں ہمسایہ جوہری مملکتوں کے درمیان جاری محاذ آرائی  کسی بھی طور اس خطے کے کروڑوں عوام کے مفاد میں نہیں ہے اور دونوں ممالک کو چایئے کہ وہ مخاصمت کا راستہ ترک کرکے موجودہ دردناک سرحدی صورتحال جس میں دونوں اطراف کے بے گناہ افراد کا خون بہہ رہا ہے کے خاتمے کے لئے ضروری اقدامات اٹھائیں۔

اجلاس میں دونوں ممالک کی قیادت پر زور دیا گیا کہ وہ مسئلہ کشمیر کو کشمیری عوام کی خواہشات کے مطابق حل کرنے کے لئے بامعنی اور نتیجہ خیر مذاکراتی عمل کا آغاز کریں تاکہ اس خطے میں موجودہ کشیدہ صورتحال کے خاتمے کے ساتھ ساتھ دیر پا امن اور سلامتی کا خواب شرمندہ تعبیر ہو سکے۔

اجلاس میں کشمیر کے طول و عرض خاص کر جنوبی کشمیر کے متعدد علاقوں میں فورسز کی جانب سے CASO کی آڑ میں پکڑ دھکڑ، مار دھاڑ، ظلم و زیادتیوں اور گرفتاریوں کی شدید مذمت  کی گئی۔

 پیغام کا اختتام/

 
آپ کا تبصرہ
نام:
ایمیل:
* رایے:
مقبول خبریں