اپ ڈیٹ: 11 November 2019 - 13:28
ایک روسی عہدیدار نے شام پر اسرائیلی جارحیت پر سخت برہمی کا اظہار کرتے ہوئے کہا ہے کہ اسرائیلی حملے کے مقابلے میں روس کے صبر کا پیمانہ لبریز ہو سکتا ہے-
خبر کا کوڈ: ۳۵۰۴
تاریخ اشاعت: 23:31 - January 23, 2019

اسرائیل کو روس کا سخت انتباہمقدس دفاع نیوز ایجنسی کی بین الاقوامی رپورٹر رپورٹ کے مطابق، روسی پارلیمنٹ دوما میں دفاعی کمیٹی کے ڈپٹی چیئرمین آندرے کراسوف نے کہا ہے کہ شام پر اسرائیلی جارحیت بین الاقوامی قوانین کی کھلی خلاف ورزی اور ایک خود مختار ملک پر حملہ ہے-

روسی دوما کی دفاعی کمیٹی کے عہدیدار نے کہا کہ شام پراسرائیلی حملوں کے مقابلے میں روس کے صبر کی بھی ایک حد ہے اور ماسکو دمشق کی فوجی حمایت جاری رکھے گا-

واضح رہے کہ پیر کو شام کے ایئر ڈیفنس سسٹم نے اسرائیل کے ذریعے فائر کئے گئے تیس سے زائد میزائلوں کو فضا میں ہی تباہ کر دیا تھا-

شام کی وزارت خارجہ نے اقوام متحدہ اور سلامتی کونسل کے نام الگ الگ مراسلے ارسال کر کے کہا ہے کہ صیہونی حکومت کی جارحیتوں کے مقابلے میں اقوام متحدہ اور سلامتی کونسل کی خاموشی کی ہی وجہ سے، تل ابیب انتظامیہ شام پر مسلسل جارحانہ حملے کر رہی ہے۔

پیغام کا اختتام/

 
 

 

آپ کا تبصرہ
نام:
ایمیل:
* رایے: